+92-308-6112254

Tarjuma Kanzul Iman

2 - Al Baqarah
قَالُوا ادْعُ لَنَا رَبَّكَ يُبَيِّنْ لَّنَا مَا ہِىَ۰ۙ۝ اِنَّ الْبَقَرَ تَشٰبَہَ عَلَيْنَا۰ۭ۝ وَاِنَّآ اِنْ شَاۗءَ اللہُ لَمُہْتَدُوْنَ﴿70﴾
بولے اپنے رب سے دعاکیجئے کہ ہمارے لئے صاف بیان کرے وہ گائے کیسی ہے بیشک گائیوں میں ہم کو شبہ پڑگیا اور اللّٰہ چاہے تو ہم راہ پا جائیں گے
قَالَ اِنَّہٗ يَقُوْلُ اِنَّہَا بَقَرَۃٌ لَّا ذَلُوْلٌ تُثِيْرُ الْاَرْضَ وَلَا تَسْقِى الْحَرْثَ۰ۚ۝ مُسَلَّمَۃٌ لَّا شِيَۃَ فِيْہَا۰ۭ۝ قَالُوا الْـــٰٔنَ جِئْتَ بِالْحَقِّ۰ۭ۝ فَذَبَحُوْھَا وَمَا كَادُوْا يَفْعَلُوْنَ﴿71﴾
کہا وہ فرماتا ہے کہ وہ ایک گائے ہے جس سے خدمت نہیں لی جاتی کہ زمین جوتے اور نہ کھیتی کو پانی دے بے عیب ہے جس میں کوئی داغ نہیں بولے اب آپ ٹھیک بات لائے (ف ) تو اسے ذبح کیا اور ذبح کرتے معلوم نہ ہوتے تھے
وَاِذْ قَتَلْتُمْ نَفْسًا فَادّٰرَءْتُمْ فِيْہَا۰ۭ۝ وَاللہُ مُخْرِجٌ مَّا كُنْتُمْ تَكْتُمُوْنَ﴿72﴾
اور جب تم نے ایک خون کیا تو ایک دوسرے پر اس کی تہمت ڈالنے لگے اور اللّٰہ کو ظاہر کرناجو تم چھپاتے تھے
فَقُلْنَا اضْرِبُوْہُ بِبَعْضِہَا۰ۭ۝ كَذٰلِكَ يُـحْىِ اللہُ الْمَوْتٰى۰ۙ۝ وَيُرِيْكُمْ اٰيٰتِہٖ لَعَلَّكُمْ تَعْقِلُوْنَ﴿73﴾
تو ہم نے فرمایا اس مقتول کو اس گائے کا ایک ٹکڑا مارو اللّٰہ یونہی مردے جلائے گا اور تمہیں اپنی نشانیاں دکھاتا ہے کہ کہیں تمہیں عقل ہو
ثُمَّ قَسَتْ قُلُوْبُكُمْ مِّنْۢ بَعْدِ ذٰلِكَ فَہِىَ كَالْحِجَارَۃِ اَوْ اَشَدُّ قَسْوَۃً۰ۭ۝ وَاِنَّ مِنَ الْحِجَارَۃِ لَمَا يَتَفَجَّرُ مِنْہُ الْاَنْہٰرُ۰ۭ۝ وَاِنَّ مِنْہَا لَمَا يَشَّقَّقُ فَيَخْرُجُ مِنْہُ الْمَاۗءُ۰ۭ۝ وَاِنَّ مِنْہَا لَمَا يَہْبِطُ مِنْ خَشْـيَۃِ اللہِ۰ۭ۝ وَمَا اللہُ بِغَافِلٍ عَمَّا تَعْمَلُوْنَ﴿74﴾
پھر اس کے بعد تمہارے دل سخت ہوگئے تو وہ پتھروں کی مثل ہیں بلکہ ان سے بھی زیادہ کَرّے اور پتھروں میں تو کچھ وہ ہیں جن سے ندیاں بہہ نکلتی ہیں اور کچھ وہ ہیں جو پھٹ جاتے ہیں تو ان سے پانی نکلتا ہے اور کچھ وہ ہیں کہ اللّٰہ کے ڈر سے گر پڑتے ہیں اور اللّٰہ تمہارےکَوْتکَوْں سے بے خبر نہیں
اَفَتَطْمَعُوْنَ اَنْ يُّؤْمِنُوْا لَكُمْ وَقَدْ كَانَ فَرِيْقٌ مِّنْھُمْ يَسْمَعُوْنَ كَلٰمَ اللہِ ثُمَّ يُحَرِّفُوْنَہٗ مِنْۢ بَعْدِ مَا عَقَلُوْہُ وَھُمْ يَعْلَمُوْنَ﴿75﴾
تو اے مسلمانو کیا تمہیں یہ طمع ہے کہ یہ یہودی تمہارا یقین لائیں گے اور ان میں کا تو ایک گروہ وہ تھا کہ اللّٰہ کا کلام سنتے پھر سمجھنے کے بعد اسے دانستہ بدل دیتے
وَاِذَا لَقُوا الَّذِيْنَ اٰمَنُوْا قَالُوْٓا اٰمَنَّا۰ۚۖ۝ وَاِذَا خَلَا بَعْضُھُمْ اِلٰى بَعْضٍ قَالُوْٓا اَتُحَدِّثُوْنَھُمْ بِمَا فَتَحَ اللہُ عَلَيْكُمْ لِـيُحَاۗجُّوْكُمْ بِہٖ عِنْدَ رَبِّكُمْ۰ۭ۝ اَفَلَا تَعْقِلُوْنَ﴿76﴾
اور جب مسلمانوں سے ملیں تو کہیں ہم ایمان لائے اور جب آپس میں اکیلے ہوں تو کہیں وہ علم جو اللّٰہ نے تم پر کھولا مسلمانوں سے بیان کئے دیتے ہو کہ اس سے تمہارے رب کے یہاں تمہیں پر حجت لائیں کیا تمہیں عقل نہیں
Join Our Online Tajveed Course Classes
Flag Counter
Top