+92-308-6112254

Tarjuma Kanzul Iman

16 - An Nahl
ثُمَّ يَوْمَ الْقِيٰمَۃِ يُخْــزِيْہِمْ وَيَقُوْلُ اَيْنَ شُرَكَاۗءِيَ الَّذِيْنَ كُنْتُمْ تُشَاۗقُّوْنَ فِيْہِمْ۰ۭ۝ قَالَ الَّذِيْنَ اُوْتُوا الْعِلْمَ اِنَّ الْخِزْيَ الْيَوْمَ وَالسُّوْۗءَ عَلَي الْكٰفِرِيْنَ﴿27﴾
پھر قیامت کے دن انہیں رسوا کرے گا اور فرمائے گا کہاں ہیں میرے وہ شریک جن میں تم جھگڑتے تھے علم والے کہیں گے آج ساری رسوائی اور برائی کافروں پر ہے .
الَّذِيْنَ تَتَوَفّٰىہُمُ الْمَلٰۗىِٕكَۃُ ظَالِمِيْٓ اَنْفُسِہِمْ۰۠۝ فَاَلْقَوُا السَّلَمَ مَا كُنَّا نَعْمَلُ مِنْ سُوْۗءٍ۰ۭ۝ بَلٰٓى اِنَّ اللہَ عَلِيْمٌۢ بِمَا كُنْتُمْ تَعْمَلُوْنَ﴿28﴾
وہ کہ فرشتے ان کی جان نکالتے ہیں اس حال پر کہ وہ اپنا برا کررہے تھے اب صلح ڈالیں گے کہ ہم تو کچھ برائی نہ کرتے تھے ہاں کیوں نہیں بیشک اللہ خوب جانتا ہے جو تمہارے کوتک تھے
فَادْخُلُوْٓا اَبْوَابَ جَہَنَّمَ خٰلِدِيْنَ فِيْہَا۰ۭ۝ فَلَبِئْسَ مَثْوَى الْمُتَكَبِّرِيْنَ﴿29﴾
اب جہنّم کے دروازوں میں جاؤ کہ ہمیشہ اس میں رہو تو کیا ہی برا ٹھکانا مغروروں کا
وَقِيْلَ لِلَّذِيْنَ اتَّقَوْا مَاذَآ اَنْزَلَ رَبُّكُمْ۰ۭ۝ قَالُوْا خَيْرًا۰ۭ۝ لِلَّذِيْنَ اَحْسَنُوْا فِيْ ہٰذِہِ الدُّنْيَا حَسَـنَۃٌ۰ۭ۝ وَلَدَارُ الْاٰخِرَۃِ خَيْرٌ۰ۭ۝ وَلَنِعْمَ دَارُ الْمُتَّقِيْنَ﴿30﴾
اور ڈر والوں سے کہا گیا تمہارے رب نے کیا اتارا بولے خوبی جنہوں نے اس دنیا میں بھلائی کی ان کے لئے بھلائی ہے اور بیشک پچھلا گھر سب سے بہتر اور ضرور کیا ہی اچھا گھر پرہیزگاروں کا
جَنّٰتُ عَدْنٍ يَّدْخُلُوْنَہَا تَجْرِيْ مِنْ تَحْتِہَا الْاَنْہٰرُ لَہُمْ فِيْہَا مَا يَشَاۗءُوْنَ۰ۭ۝ كَذٰلِكَ يَجْزِي اللہُ الْمُتَّقِيْنَ﴿31﴾
بسنے کے باغ جن میں جائیں گے ان کے نیچے نہریں رواں انہیں وہاں ملے گا جو چاہیں اللہ ایسا ہی صلہ دیتا ہے پرہیزگاروں کو
الَّذِيْنَ تَتَوَفّٰىہُمُ الْمَلٰۗىِٕكَۃُ طَيِّبِيْنَ۰ۙ۝ يَقُوْلُوْنَ سَلٰمٌ عَلَيْكُمُ۰ۙ۝ ادْخُلُوا الْجَنَّۃَ بِمَا كُنْتُمْ تَعْمَلُوْنَ﴿32﴾
وہ جن کی جان نکالتے ہیں فرشتے ستھرے پن میں یہ کہتے ہوئے کہ سلامتی ہو تم پر جنّت میں جاؤ بدلہ اپنے کئے کا
ہَلْ يَنْظُرُوْنَ اِلَّآ اَنْ تَاْتِيَہُمُ الْمَلٰۗىِٕكَۃُ اَوْ يَاْتِيَ اَمْرُ رَبِّكَ۰ۭ۝ كَذٰلِكَ فَعَلَ الَّذِيْنَ مِنْ قَبْلِہِمْ۰ۭ۝ وَمَا ظَلَمَہُمُ اللہُ وَلٰكِنْ كَانُوْٓا اَنْفُسَہُمْ يَظْلِمُوْنَ﴿33﴾
کاہے کے انتظار میں ہیں مگر اس کے کہ فرشتے ان پر آئیں یا تمہارے رب کا عذاب آئے ان سے اگلوں نے بھی ایسا ہی کیا اور اللہ نے ان پر کچھ ظلم نہ کیا ہاں وہ خود ہی اپنی جانوں پر ظلم کرتے تھے
فَاَصَابَہُمْ سَـيِّاٰتُ مَا عَمِلُوْا وَحَاقَ بِہِمْ مَّا كَانُوْا بِہٖ يَسْتَہْزِءُوْنَ﴿34﴾
تو ان کی بری کمائیاں ان پر پڑیں اور انہیں گھیرلیا اس نے جس پر ہنستے تھے
Join Our Online Tajveed Course Classes
Flag Counter
Top